نصیر آباد، راولپنڈی، پولیس نے پیرودھائی کی ایک مسجد کے امام کو گیارہ سالہ بچی کے ساتھ زیادتی کرنے کے جرم میں گرفتار کر لیا۔

‏راولپنڈی نصیر آباد میں یہ مولانا صاحب امامت کرتے تھے ، ممبر رسول پر درس قرآن اور قال رسول اللہ بیان کرتے۔ لیکن ساتھ…

Posted by Broken News Official on Friday, March 20, 2020
Video: Imam Masjid arrested in Rawalpindi for abusing 11-year-old girl

خلیل الرحمن نامی شخص، جو پیرودھائی، راولپنڈی کی ایک مسجد میں نماز پڑھاتا ہے، اور شام کے وقت بچوں کو قرآن پڑھاتا ہے، نے اپنے اقبالی بیان میں انکشاف کیا کہ وہ گزشتہ ڈیڑھ مہینے سے گیارہ سالہ بچی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنا رہا تھا۔

مزید دیکھیں: “کوئی بے احتیاطی نہ کریں، میری حالت دیکھیں” کروناوائرس کی مریض لڑکی نے اپنی حالت کی ویڈیو جاری کر دی۔ خاص ان کیلئے جو چھٹیوں کو پکنک سمجھ کر منا رہے ہیں”۔

مزید دیکھیں: “ایسا لگتا ہے شامی بچے کی شکایت اللہ نے سن لی جس نے کہا تھا، میں اوپر جا کر اللہ کو سب بتاؤں گا”، ڈاکٹر شاہد مسعود کا بیان اور اس بچے کی ویڈیو۔

ملزم کا اقبالی بیان راولپنڈی پولیس نے اپنے آفیشل سوشل میڈیا پیج پہ جاری کیا۔ جس کو سننے کے بعد عوام میں شدید غصہ نظر آ رہا ہے۔ اور زیادہ تر لوگ مطالبہ کر رہے ہیں کہ ایسے درندے کو جیل میں ڈالنے کا کوئی فائدہ نہیں۔

1 COMMENT

Your Comments Will help Us to Improve.